حضرت علی کے اقوال

حضرت علی بن ابی طالب (رضی اللہ عنہ)، اسلامی تاریخ کے اہم شخصیتوں میں سے ایک ہیں۔ ان کی بات چیت، حکمت، اقوال اور فکری اشعار انسانیت کے لئے قیمتی سبق فراہم کرتے ہیں۔ یہاں چند حضرت علی کے بہترین اقوال مذکور ہیں:

جو شخص زندگی کو بہتر بنانا چاہتا ہے، پہلے اپنے دل کو بہتر بنائے۔

تمہارے دوست کے مخالف تھے جو تمہیں بدتمیزی کرتا ہے۔ مگر تمہارے دوست کے مخالف بھی ہیں جو تمہارے برا چاہتے ہیں، لیکن تمہارے دوست کے مخالف تھے جو تمہارے اچھے کے لئے برا چاہتے ہیں۔

صبر کرو کہ کوئی تمہاری کمی نہیں، ناکامی تمہارا بچا ہوا کام ہے اور تمہارا بچا ہوا کام ہے وہ تمہارے لئے ہوتا ہے۔

اپنی بدترین عادت، دوسروں کے چھوٹے برے کاموں کو دیکھنا ہے۔

جو ہمیں دوست کے نقصان سے بچاۓ، ہمیں اس سے زیادہ فائدہ پہنچاتا ہے۔

اپنے مقصد کو کبھی بھی نہیں بھولو، مگر اپنے راستے کو یاد رکھو۔

تصور کرو کہ دنیا اٹھانے کی کوشش میں ہو، لیکن کوئی چیز نہ ملے۔

جو اپنے غصے کو قابو نہیں کرتا، وہ اپنے دشمن کو قابو نہیں کر سکتا۔

اپنے علم کی محدودیتوں کو قبول کرو، تاکہ تمہیں زیادہ علم حاصل ہو سکے۔

اپنے دل کی سنو، لیکن اپنے آگے دلیل پیش کرو۔

دوسروں کے بڑھنے سے پہلے اپنی پہچان بناؤ۔

دوسروں کے ساتھ اتفاق رکھنا سیکھو، اس سے زندگی آسان ہو جائے گی۔

اپنی کمیوں کو اپنے فائدے کے لئے استعمال کرو۔

دوسروں کی حمایت کریں، تاکہ وہ بھی تمہاری حمایت کریں۔

اپنی بے چینی کو کم کرو، کیونکہ یہ زندگی کے قرارداد کی مخالفت کرتی ہے۔

دوسروں کے معاملات میں سچائی اور ایمانداری کا مقام رکھو۔

دوسروں کو نصیحت دو، مگر اس قدر محبت سے کہ وہ نصیحت کو قبول کر سکیں۔

جو شخص خود کو بزرگ سمجھتا ہے، دوسروں کی تعریف کرتا ہے۔

اپنے آپ کو بہترین طریقے سے تربیت دو، تاکہ دوسروں کو بھی احترام سے پیش آئو۔

زندگی کو سادہ رکھو، کمپلیکیٹ نہ بناؤ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں